TOP

اے دسمبر


اے دسمبر ! تیری یخ بستگی میں بھی

طلب کسی کی کیوں منجمد نہیں ہوتی۔۔۔

0 comments:

Post a Comment