TOP

مگر



مگر میں کوئی پیغمبر نہیں ہوں 

ستم پر خندہ پیشانی کہاں کی

0 comments:

Post a Comment